Monday, April 18, 2016

کرکٹ بورڈ کا خفیہ مشن

پاکستان کرکٹ بورڈ تمام سینئیر اسٹار کرکٹرز کو باری باری عہدیدار مقرر کر کے انہیں کتا کرنے کے مشن پر ہے۔

وہ دن دور نہیں جب یہ سپر اسٹارز آگے آگے ہونگے اور کرکٹ بورڈ ان کے پیچھےعہدے لے کر بھاگ رہے ہوںگے۔

بے چارہ انضمام :P

Thursday, April 7, 2016

ضمیر

کاش ہماری کرکٹ ٹیم میں کوئی مصطفیٰ کمال ہوتا، جس کا ضمیر جاگتا اور وہ ایک نئی کرکٹ ٹیم بناتا، پھر باری باری سارے کھلاڑیوں کا ضمیر جاگتا جاتا اور وہ نئی کرکٹ ٹیم میں شامل ہوتے جاتے، اور بہت جلد پرانے کھلاڑیوں کی نئی با ضمیر ٹیم ڈرائی کلین ہوکے تیار ہوجاتی :P کیا خبر ایک آدھ خاتون کرکٹر کا ضمیر جاگ جاتا اور وہ بھی ان کی ٹیم میں آجاتی :D

Saturday, March 19, 2016

تذبذب


ایک تو آجکل یہ فیصلہ کرنا بڑا مشکل ہوگیا ہے کہ اگلا بندہ کہاں تک نائس ہورہا ہے اور کہاں سے ٹھرکی ہونا شروع ہوگیا ہے ۔

جواب میں کہاں تک بس مسکرا دیا جائے اور کہاں پر چپیڑ مارنے کا مقام آگیا ہو :D

سوچ ہے آپکی ;)



حالیہ دورہ ہائے اسلام آباد, گجرانوالہ و لاہور کے دوران جو جملہ سب سے زیادہ سننے میں آیا وہ تھا "سوچ ہے آپکی" ۔ خاص کر لڑکوں کا یہ فیورٹ جملہ ہے جو وہ دوران گفتگو خواتین کو یہ بتانے کے لیے استعمال کرتے ہیں کہ ان بے چاریوں کی پرواز ِ خیال کتنی نیچی ہے .. 
جبکہ اصل میں وہ یہ بتا رہے ہوتے ہیں کہ وہ کس قدر "گھٹیا" ہوسکتے ہیں کہ وہاں تک مسوم خواتین کی سوچ کے پر بھی جل جاتے ہیں ۔

تھوڑے لکھے کو بہت سمجھیں ورنہ 
سوچ ہے آپکی :P 

Tuesday, March 8, 2016

عالمی یومِ خواتین


"ہم مائیں، ہم بہنیں، ہم بیٹیاں
قوموں کی عزت ہم سے ہے۔"


ہم انسان بھی ہیں 
اور ہماری اپنی بھی کوئی عزت ہے کہ نہیں 
یا ہم تمہاری عزت کےلیے ہی قربان اور کاری ہوتی رہیں
اور تم لوگ خود کوئی ایسے کام کیوں نہیں کرتے کہ تمہاری خود بھی کوئی عزت ہو :P

Friday, December 18, 2015

Age



"Age is nothing, but a number."

"Yes .. and numbers keep growing from single to double, triple or to ROUND figures."

:P


Friday, November 13, 2015

ہم دیکھیں گے

جب بندہ رات گئے تک ایم فل مقالہ پر کام کر رہا ہو اور اچانک میڈیا پلیئر پر اقبال بانو فیض احمد فیض سنانے لگیں تو دل میں کیسے کیسے خیال آتے ہیں۔ یہ تظمین مجھ پر قاہرہ میں اپنے ایم فل کے تھیسیس کے دوران اتری تھی۔
ہم دیکھیں گے

ہم دیکھیں گے
لازم ہے کہ ہم بھی دیکھیں گے
لازم ہے کہ ہم ھی دیکھیں گے
وہ دن کہ جسکا وعدہ ہے
مطلب ریسرچ ڈسکشن ڈے
جو لوحِ ازل میں لکھا ہے
 کسی نہ کسی دن تو آنا ہے 
ہم محکوموں کے پاوں تلے
ہم مظلوموں کے پاوں تلے 
جب دھرتی دھڑ دھڑ دھڑکے گی
 صرف دھرتی نہیں آسمان بھی دھڑ دھڑ دھڑکے گا
سب تاج اچھالے جائیں گے
 سب پرہی یہ دن آئے گا
سب تخت گرائے جائیں گے
ڈسکشن پینل سپروائزر کے بدلے ہم سے لے گا
ہم اہل صفا مردودِ حرم
مطلب ساری بزتی خراب ہونے کے بعد
مسند پہ بٹھائے جائیں گے
 ڈگری ملے گی